300-320 certification material 1Z0-061 book CCBA course 98-367 software tutorial

بدھ‬‮   22   ستمبر‬‮   2021


کورونا کی ایک نئی قسم’’مو‘‘نےخطرے کی گھنٹی بجادی


جنیوا(نیوز ڈیسک ) ڈبلیو ایچ او نے کہا ہے کہ کورونا کی ایک نئی قسم ’’مو‘‘پر ویکسین بھی موثر نہیں، سمجھنے کیلئے مزید تحقیق کرنا ہوگی۔عالمی میڈیا کی رپورٹ کےمطابق ’’مو‘‘نامی نئے کورونا ویرئنٹ کا سائنسی نام ’بی.1.621‘ ہے جس کے حوالے سے عالمی ادارہ صحت نے تشویش کا اظہار کیا ہے۔عالمی ادارہ صحت کا کہنا ہےکہ ’’مو‘‘ ویریئنٹ میں

ہونے والی جنیاتی تبدیلیوں کے خلاف ویکسین کے مؤثر نہ ہونے کا خطرہ پایا جاتا ہے۔ تاہم عالمی ادارہ صحت نے زور دیا ہے کہ وائرس کی اس نئی قسم کو سمجھنے کے لیے مزید تحقیق کی ضرورت ہے۔ مو وائرس کی عالمی سطح پر موجودگی کی شرح 0.1 فیصد سے کم ہے جبکہ کولمبیا میں 39 فیصد ہے۔ مو وائرس کی کولمبیا میں شناخت کے بعد یورپ اور دیگر جنوبی امریکی ممالک میں بھی اس کے کیسز سامنے آئے ہیں۔ڈبلیو ایچ او کے مطابق مو وائرس میں مدافعتی عمل کو نظر انداز کرنے کی خصوصیات پائی جاتی ہیں۔ یاد رہے کہ ڈیلٹا ویریئنٹ نے ان افراد کو سب سے زیادہ متاثر کیا ہے جنہوں نے ویکسین نہیں لگوائی ہوئی تھی یا جن علاقوں میں وائرس سے بچاؤ کے حفاظتی اقدامات پر سختی سے عمل نہیں کیا جا رہا تھا۔عالمی ادارہ صحت کووڈ 19 کی چار اقسام کی شناخت کر چکا ہے جن میں سے ایلفا 193 ممالک میں جبکہ ڈیلٹا وائرس 17 ممالک میں موجود ہے۔ جبکہ ’’مو‘‘ سمیت دیگر پانچ اقسام کو فی الحال مانیٹر کرنے کی ضرورت ہے۔

 


اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


تازہ ترین ویڈیو
کوہلی کی غصے سے گرائونڈ میں داخل ہونے کی کوشش...
بھارتیوجھوٹ بولنابندکرو،آپ نے پاکستان کاکوئی ایف 16نہیں گرایا...
Most Beautiful Azan -Mashallah

دلچسپ و عجیب

صحت

Copyright © 2017 www.forikhabar.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us