300-320 certification material 1Z0-061 book CCBA course 98-367 software tutorial

اہم ترین شہر میں تیل کا اتنا بڑا ذخیرہ دریافت کر لیا گیا کہ آپ کی زبان شکر الحمد للہ کا ورد کرنے لگے گی - Forikhabar
منگل‬‮   12   ‬‮نومبر‬‮   2019

240-22

اہم ترین شہر میں تیل کا اتنا بڑا ذخیرہ دریافت کر لیا گیا کہ آپ کی زبان شکر الحمد للہ کا ورد کرنے لگے گی


کوہاٹ(ویب ڈیسک ) او جی ڈی سی ایل نے کوہاٹ میں سے تیل اور گیس کے نئے ذخائر دریافت کر لیے ہیں جو کہ پاکستانیوں کے لئے ایک بڑی خوشخبری ہے ۔ تفصیلات کے مطابق او جی ڈی سی ایل کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ ایکسپلو ریٹری ویل ٹوگ نمبر ایک سے ذخائر دریافت ہوئے ہیں ، یہاں سے 4.1 ایم ایم سی ایف ڈی گیس ، 50 بیرل تیل

دسیتاب ہو گا ۔ دریافت سے ملک میں ہائیڈروکاربن کے ذخائر بڑھیں گے جبکہ ملکی معیشت پر مثبت اثرات مرتب ہوں گے ۔ یاد رہے کہ قدرتی گیس کے موجودہ ذخائر کے حوالے سے پیٹرولیم ڈویژن نے سنگین صورت حال سے آگاہ کردیا ہے۔ دریافت شدہ گیس میں سے دو تہائی استعمال ہوچکی ہے اور صرف 20 سال کے ذخائر باقی رہ گئے ہیں۔ پاکستان میں قدرتی گیس کے حوالے سے پٹرولیم ڈویژن نے خطرے کی گھنٹی بجا دی گئی ہے۔ دریافت کردہ 61 ہزارارب کیوبک فٹ گیس میں سے صرف 21 ہزار ارب کیوبک فٹ گیس کے ذخائر ہی باقی رہ گئے ہیں اور 39 ہزار 750 ارب کیوک فٹ گیس استعمال میں لائی جا چکی ہے۔ ملک کے موجودہ ذخائر میں 65 فیصد کمی ہوگئی ہے۔ پیٹرولیم ڈویژن کی دستاویزات میں کہا گیا ہےکہ سوئی کے12 ہزارارب کیوبک فٹ ذخائر میں اب صرف 1 ہزار ارب کیوبک فٹ گیس باقی رہ گئی جس کی وجہ سے ملکی ضروریات کا زیادہ انحصار اب سندھ کے ذخائر پر ہے۔ دستاویزات کے مطابق 80 ذخائر مکمل طور پر خالی ہوچکے ہیں جبکہ مزید 100 کنوئیں آئندہ ایک سال تک ختم ہو جائیں گے۔ پیٹرولیم ڈویژن حکام نے یہ بھی کہا ہے کہ نئے ذخائر

دریافت نہ ہوئے تو 20سال بعد گیس کی دستیابی ختم ہونے کے باعث درآمد مجبوری بن جائے گی۔


اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


تازہ ترین ویڈیو
Most Beautiful Azan -Mashallah

دلچسپ و عجیب
77013084_429656097714546_1545311920087629824_n
60081097_330631854290164_9068261285824561152_n
24-1
240-4
320-4
740-4
۱۳
15
7-4
75542717_418081028878490_6352975372086149120_n

صحت
8
520-3
11
10
11
31
6
940-25
1-16
72373221_442479806624761_6363065654718758912_n

Forikhabar
            
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ نیوز محفوظ ہیں۔
Copyright © 2019 forikhabar.com All Rights Reserved