300-320 certification material 1Z0-061 book CCBA course 98-367 software tutorial

مولانا فضل الرحمان کو زور دار جھٹکا ۔۔۔ الیکشن کمیشن سے تازہ ترین خبر آگئی - Forikhabar
بدھ‬‮   20   ‬‮نومبر‬‮   2019

25

مولانا فضل الرحمان کو زور دار جھٹکا ۔۔۔ الیکشن کمیشن سے تازہ ترین خبر آگئی


اسلام آباد (ویب ڈیسک) جمیعت علمائے اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کو زوردار جھٹکا لگ گیا، اپلیکشن کمیشن آج پاکستان (ای سی پی ) کا اہم بیان سامنے آگیا۔ الیکشن کمیشن آف پاکستان نے فارم 45 سے متعلق جمعیت علمائے اسلام (ف)کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کے الزامات کو مسترد کردیا۔ الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری ایک بیان میں کہا

گیا ہے کہ پولنگ اسٹیشنوں کا نتیجہ پولنگ ایجنٹوں کے دستخطوں کے بغیر ہونےکا مولانا فضل الرحمان کا بیان ٹھیک نہیں ہے ، کمیشن نے اپنی رپورٹ میں ایسے کوئی اعداد شمارنہیں دیئے ، ایسے فرضی اور غیر مصدقہ حوالہ جات سے اجتناب کیا جائے ۔ مولانا فضل الرحمان نے 95 فیصد پولنگ اسٹشینوں کا نتیجہ پولنگ ایجنٹس کے دستخطوں کے بغیر دیے جانے کا بیان دیا تھا۔ مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ 2014ء میں 126 دن کے دھرنے پر اعتراض کیوں نہیں تھا؟ اور آج تمام حزب اختلاف کی جماعتیں سراپا احتجاج ہیں تو اس پر اعتراض کیا جا رہا ہے۔ ہم مطالبے کے تسلسل کو برقرار رکھے ہوئے ہیں۔ ہمارے ساتھیوں کو اشتعال دلانے کی کوششوں کو ختم ہونا چاہیے۔ ہم نے نظم وضبط کا مظاہرہ کیا، ہمارے مطالبات کو ماننا پڑے گا۔ آنے والا وقت عوام اور پارلیمان کی بالادستی کا ہے۔ یہ آزادی مارچ آنے والے مستقبل کے انقلاب کی نوید دے رہا ہے۔ آزادی مارچ نے دنیا کو بتا دیا کہ انتقام کے نام پر احتساب کا ڈرامہ مزید نہیں چل سکے گا۔ جمعیت علمائے اسلام کا اپنا ایک منشور ہے جو صوبائی خود مختاری کی بات کرتا ہے۔ جے یو آئی کے سربراہ نے کہا کہ آج ہم

خارجی محاذ پر تنہا ہیں۔ افغانستان کیساتھ ہم اعتماد قائم نہیں رکھ سکے۔ چین کی دوستی کو دنیا کے سامنے مثال کے طور پر پیش کیا کرتے تھے۔ موجودہ حکومت نے چین کی سی پیک سرمایہ کاری کو غارت کرکے اس کے اعتماد کو ٹھیس پہنچائی۔ ان کا کہنا تھا کہ حکومت نے ایک سال میں تین بجٹ کی روایت ڈالی۔ پاکستان تیزی کے ساتھ معاشی طور پر گر چکا ہے۔ اگر ایک بجٹ مزید پیش کرنے دیا گیا تو پاکستان کا آخری دن ہوگا۔ ان کو مزید وقت دیا تو روزانہ کی بنیاد مزید نیچے کی طرف جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ جب تک کشمیر کمیٹی میرے پاس تھی، کوئی مائی کا لعل کشمیر نہیں بیچ سکا، آج کشمیر کو بیچ کر روتے ہیں۔ جو کچھ بھارت نے کیا، یہی ان کا ایجنڈا تھا۔ مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ اگر ظلم ہوگا تو اسے ببانگ دہل ظلم ہی کہیں گے۔ قوم سے کیوں جھوٹ بولا جا رہا ہے۔ آؤ سچ کی طرف آؤ، آئیں ہم مل کر چلیں۔ ہمارا کوئی جھگڑا نہیں، ملک کو اصول کی بنیاد پر چلایا جائے۔ ملک کو ان حالات کی طرف کیوں دھکیلا جا رہا ہے؟ اس طرح جب سیاست چلے گی تو پھر انصاف نہیں ہوگا۔ اگر ملک میں آئین اور جمہوریت ہے تو پارلیمنٹ کی بالادستی کو تسلیم کرنا ہوگا۔

پارلیمنٹ بنے گی تو عوام کے ووٹ سے بنے گی۔


اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


تازہ ترین ویڈیو
Most Beautiful Azan -Mashallah

دلچسپ و عجیب
12
8
77324720_1534891063320037_1882845200787701760_n
۴
77013084_429656097714546_1545311920087629824_n
60081097_330631854290164_9068261285824561152_n
24-1
240-4
320-4
740-4

صحت
6
6
18
13
8
520-3
11
10
11
31

Forikhabar
            
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ نیوز محفوظ ہیں۔
Copyright © 2019 forikhabar.com All Rights Reserved